defence-day-pakistan 61

شہداء اورغازیوں کو خراج عقیدت پیش کرنے کے لئے آج یوم دفاع اورشہداء اس عزم کی تجدید کے ساتھ منایا جارہاہے

شہداء اورغازیوں کو خراج عقیدت پیش کرنے کے لئے آج یوم دفاع اورشہداء اس عزم کی تجدید کے ساتھ منایا جارہاہے کہ تمام خطرات کے خلاف وطن کادفاع کیاجائے گا۔

1965ء میں اس دن بھارتی فوج نے رات کی تاریکی میں بین الاقوامی سرحد پار کرکے پاکستان پرحملہ کیا تھا تاہم قوم نے دشمن کے مذموم عزائم ناکام بنادیئے۔

یوم دفاع اورشہداء یوم یکجہتی کشمیر کے طورپربھی منایاجارہاہے جس کامقصد مظلوم کشمیریو ںکے ساتھ پاکستانی عوام کی حمایت کااعادہ کرناہے جو ایک ماہ سے زائدعرصے سے سخت محاصرے میں ہیں۔

نمازفجر کے بعدملک کی ترقی او خوشحالی اوربھارت کے ظالمانہ تسلط سے مقبوضہ کشمیر کی آزادی کے لئے خصوصی دعائیں مانگی جارہی ہیں۔ شہداء کے لئے فاتحہ اورقرآن خوانی بھی کی جائے گی۔

وفاقی دارالحکومت میں دن کاآغاز31اورصوبائی دارالحکومتوں میں21،21توپوں کی سلامی سے ہوا۔

شہداء کوخراج عقیدت پیش کرنے کے لئے دن کی مرکزی تقریب جنرل ہیڈکوارٹرراولپنڈی میں ہوگی۔

وزارت داخلہ کی جانب سے جاری ہونے والے نوٹیفکیشن کے مطابق آج تین بجے سہ پہر ملک بھرمیں تمام دفاتربندکردیئے جائیں گے اورکشمیری عوام سے اظہاریکجہتی کیاجائے گا۔

یوم دفاع وشہداء کے موقع پر صدر اور وزیراعظم نے اپنے الگ الگ پیغامات میں کہاہے کہ قوم دشمن کی کسی بھی مہم جوئی سے پوری طرح آگاہ ہے اور ممکنہ طورپربھرپورردعمل کیلئے تیارہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں